تفسیرسورۃالرعد آیت ۱۲،۱۳۔ہُوَ الَّذِیْ یُرِیْکُمُ الْبَرْقَ خَوْفًا وَّ طَمَعًا وَّیُنْشِئُ السَّحَابَ الثِّقَالَ

اللہ تعالی اورحضورتاجدارختم نبوتﷺکے گستاخوں کاآسمانی بجلی سے جل کرراکھ ہونا {ہُوَ الَّذِیْ یُرِیْکُمُ الْبَرْقَ خَوْفًا وَّ طَمَعًا وَّیُنْشِئُ السَّحَابَ الثِّقَالَ }(۱۲){وَ یُسَبِّحُ الرَّعْدُ بِحَمْدِہٖ وَالْمَلٰٓئِکَۃُ مِنْ خِیْفَتِہٖ وَ یُرْسِلُ الصَّوَاعِقَ فَیُصِیْبُ بِہَا مَنْ یَّشَآء ُ وَہُمْ یُجَادِلُوْنَ فِی اللہِ وَ ہُوَ شَدِیْدُ الْمِحَالِ }(۱۳) ترجمہ کنزالایمان:وہی ہے کہ تمہیں بجلی دکھاتا ہے ڈر کو اور امید کو اور بھاری …

مزید پڑھہں