حیض ونفاس کی کم سے کم اور زیادہ سے زیادہ مدت کتنی ہے ؟

حیض ونفاس کی کم سے کم اور زیادہ سے زیادہ مدت کتنی ہے ؟

سوال :حیض کے تعلق سے ایک سوال ہے اور ایک سوال نفاس کے تعلق سے ہے حیض کی کم سے کم مدت کتنی اور زیادہ سے زیادہ کتنی ہے ؟

الجواب : حیض کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ عورت کو عادت کے مطابق ہر مہینے آگے کے مقام سے خون آتا ہے یہ خون اگر کم سے کم تین دن آئے تو وہ حیض ہے ۔حیض کی کم سے کم مدت مذہب حنفی میں تین دن ہے پانچ دن ،سات دن، نو دن ,10 دن آخری مدت 10 دن ہیں۔ 10 دن سے زیادہ حیض نہیں ہوتا اور تین دن سے کم حیض نہیں ہوتا۔ اب عورت کی جیسی عادت ہو کچھ عورتوں کو عادت ہوتی ہے تین دن پرختم ہو جاتا ہے ،کچھ عورتوں کی عادت پانچ دن ہے۔بہت کم عورتیں ایسی ہیں جن کو دس دن تک حیض آتا ہے لیکن زیادہ سے زیادہ جو حیض آتا ہے اس کی مدت 10 دن ہے۔

تو اگر تین دن سے کم آئے تو اس کا کیا حکم ہوگا ؟

عورت ٹھیک سے شمار کرے اگر تین دن سے کم آئے خون تو اس خون کو حیض کا خون نہیں کہیں گے اس کو بیماری کا خون کہیں گے ۔بیماری کے خون کو عربی زبان میں ،فقہ کی زبان میں استحاضہ کا خون کہا جاتا ہے ۔استحاضہ کا خون عورت کو آئے تو اس سے نماز معاف نہیں ہوتی اور روزہ چھوڑنا بھی جائز نہیں ہوتا تو اس پر فرض ہوگا کہ ہر نماز کے وقت میں تازہ وضو کرے اگر مسلسل خون ا ٓرہا ہے تو ہر نماز کے وقت میں تازہ وضو کرے اور پورے نماز کے وقت میں وہ جو نماز بھی ادا کرنا چاہے ادا کر سکتی ہے اور وہ رمضان شریف کا مہینہ ہے تو رمضان شریف کے روزے بھی رکھے ۔شوہر کے ساتھ بھی رہ سکتی ہے کوئی چیز اس سے ممنوع نہیں ہے کھانا پکایے،فاتحہ کرے، وہ ایک پاک عورت ہے ۔پاک عورت کے جو احکام ہوتے ہیں وہ سارے احکام اس پر نافذ ہوں گے۔

نفاس کے لیے کم سے کم اور زیادہ سے زیادہ کتنی مدت ہے ؟

نفاس کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ عورت کے بچہ پیدا ہونے کی وجہ سےعورت کے آگے کے مقام سے جو خون آتا ہے وہ خون نفاس کا خون کہلاتا ہے اس خون کی زیادہ سے زیادہ مدت 40 دن ہے اور کمی میں 10 دن 15 دن اٹھ دن، سات دن، پانچ دن، دو دن ،ایک دن، ایک گھنٹہ، دو گھنٹہ، آدھا گھنٹہ بھی ہو سکتا ہے تو کمی کی کوئی مدت مقرر نہیں ،کوئی حد مقرر نہیں ہے۔
یہ خون عورت کی صحت پر منحصر ہوتا ہے اگر موٹی تازی عورت ہے تو اس کو زیادہ خون آ سکتا ہے اور جس کے بدن میں خون کی پیدائش کم ہوتی ہے اسے ایک دو گھنٹے بھی خون آ کر کے رک جاتا ہے بلکہ کچھ عورتوں کے ذریعے تو یہ معلوم ہوا کہ گھنٹہ آدھا گھنٹہ بھی خون آ کر کے ختم ہو گیا ۔تو کم سے کم کی کوئی مدت نہیں ہے دس منٹ، 20 منٹ، آدھا گھنٹہ، پانچ گھنٹہ بھی ہو سکتا ہے ۔
کتبہ : مفتی نظام الدین رضوی جامعہ اشرفیہ مبار ک پور ( سوال و جواب شیشن آزاد میدان ۲۰۲۳)

Haiz o Nifas ki kam se kam muddat kitni hai ?

Leave a Reply